INFOTAINMENT

آسٹریلیا کے مغربی علاقے جیوگرافی بے میں 8 ٹانگوں والے آبی جانور نے باپ اور دو سالہ بیٹی پر حملے حملہ کر کے سب کو حیران کردیا۔آسٹریلیا کے مغربی علاقے جیوگرافی بے میں 8 ٹانگوں والے آبی جانور نے باپ اور دو سالہ بیٹی پر حملے حملہ کر کے سب کو حیران کردیا۔جنگلی حیات میں منفرد خصوصیات رکھنے والے آبی جانور آکٹو پس کے حوالے سے آپ شاید بہت کچھ جانتے ہوں مگر آپ کو یہ معلوم نہیں ہوگا کہ آکٹوپس غصہ ہوکر حملہ بھی کرسکتا ہے۔یہ واقعہ آسٹریلیا سے تعلق رکھنے والے ماہرِ ارضیات (جیو لوجسٹ) اور مصنف لانس کارلسن کے ساتھ جنوبی علاقے میں واقع ریزوٹ پر پیش آیا۔انہوں نے بتایا کہ وہ اپنے اہل خانہ کے ساتھ تفریح کی غرض سے جیوگرافی بے گئے، جہاں انہوں نے پانی میں غوطہ لگایا تو اندر موجود آکٹو پس نے اُن پر حملہ کردیا۔آکٹو پس کے حملے کے بعد لانس فوراً پانی سے باہر نکلے اور کنارے پر آگئے۔ انہوں نے بتایا کہ میرے ساتھ دو سالہ بیٹی بھی تھی۔لانس نے بتایا کہ آکٹوپس اُن کی موجودگی کے باوجود کنارے کی طرف آگیا تھا اور اُس نے ہم پر حملہ بھی کیا، جس کی وجہ سے میں خود بھی حیران ہوا، تقریباً بیس منٹ کے بعد وہ تیرتا ہوا دوسری طرف چلا گیا۔لانس نے آکٹوپس کے حملے کی ویڈیو سماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر بھی شیئر کی۔8 ٹانگوں والے سمندری جانور کا باپ بیٹی پر حملہ، ویڈیو وائرل پانی میں غوطہ لگایا تو اندر موجود آکٹو پس نے اُن پر حملہ کردیا, اہل خانہ

CORONA VIRUS

کورونا کی تیسری لہر شدت اختیار کرگئی مثبت کیسز میں ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہورہا ہے ملک بھر میں کورونا کے مثبت کیسز کی تعداد 5 ہزار سے بڑھ گئی۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کی جانب سے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 50 ہزار 170 کورونا ٹیسٹ کئے گئے، جس کے بعد مجموعی کووڈ 19 ٹیسٹس کی تعداد ایک کروڑ 2 لاکھ 97 ہزار 54 ہوگئی ہے۔گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں مزید 5 ہزار 234 مثبت کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ اس طرح پاکستان میں کورونا کے مصدقہ مریضوں کی تعداد 6 لاکھ 78 ہزار 165 ہوگئی ہے۔سرکاری اعداد و شمار کے مطابق اب تک سندھ میں 2 لاکھ65 ہزار 917 ، پنجاب میں 2 لاکھ 25 ہزار 953، خیبر پختونخوا میں 89 ہزار 255، اسلام آباد میں 59 ہزار 401، بلوچستان میں 19 ہزار 610، آزاد کشمیر میں 12 ہزار 984 اور گلگت بلتستان میں 5 ہزار 045 افراد میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ سرکاری اعداد و شمار کے مطابق اس وقت ملک بھر میں کورونا کے فعال مریضوں کی تعداد 56 ہزار 347 ہے۔ جب کہ 3 ہزار سے زائد مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں کورونا سے مزید 83 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں جس کے بعد اب اس وبا سے جاں بحق ہونے والے افراد کی تعداد مجموعی طور پر 14 ہزار 613 ہوگئی ہے۔این سی او سی کے مطابق کورونا سے ایک دن میں ایک ہزار 931 مریض صحت یاب ہوئے جس کے بعد صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد 6 لاکھ 07 ہزار 205 ہوگئی ہے۔

ARMY CHIEF

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے یوکرائن کے سفیر نے ملاقات۔ ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور سمیت خطے کی سیکورٹی صورتحال پر تبادلہ خیال آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے یوکرائن کے سفیر کی ملاقات، ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور سمیت خطے کی سیکورٹی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے کہا کہ پاکستان تمام شعبوں میں یوکرائن کے ساتھ دوطرفہ تعلقات کے فروغ کو بہت اہمیت دیتا ہے۔یوکرائنی سفیر نے خطے میں امن اور افغان امن عمل میں پاکستان کے کردار کو سراہا ۔
اس موقع پر دونوں ملکوں نے دفاعی تعاون سمیت باہمی روابط میں اضافے کے عزم کا اعادہ کیا۔

INFOTAINMENT

ترکی کے ضلع ازمیر کے ایک اسپتال میں دلچسپ واقعہ پیش آیا جس میں بلی اپنے بیمار بچے کو علاج کے لیے منہ میں اٹھا کر اسپتال لے آئی۔غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق اسپتال کے کیمرے سے لی گئی فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بلی اپنے بچے کو منہ میں اٹھا کر اسپتال کے دروازے سے اندر آتی ہے۔دروازے پر کھڑے لوگ بلی کو راستہ دینے کے لیے ایک طرف ہو جاتے ہیں جب کہ کچھ لوگ دوسروں کو بلی کے لیے راستہ بنانے کا کہتے ہیں۔رپورٹ کے مطابق ڈاکٹرز نے جب بلی کے بچے کا معائنہ کیا تو معلوم ہوا کہ اس کی آنکھ میں انفیکشن ہے۔ بعد ازاں ڈاکٹرز کی جانب سے یہ کیس جانوروں کے ڈاکٹر کی طرف منتقل کر دیا گیا۔اسپتال کے عملے کی جانب سے ریکارڈ کی گئی ایک اور ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بلی کے دو بچے موجود ہیں جس سے ڈاکٹر باتیں کر رہے ہوتے ہیں۔یک اور ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ نرس بلی کے بچے کی آنکھ میں ڈراپس ڈال رہی ہوتی ہے۔رپورٹ کے مطابق مقامی میڈیا سے بات کرتے ہوئے اسپتال کے اسٹاف نے بتایا کہ وہ اکثر بلی کو کھانا اور دودھ دیتے رہتے تھے۔انہوں نے بتایا کہ ہمیں یہ نہیں معلوم تھا کہ اس بلی نے بچے بھی دیئے ہیں۔ناقابل یقین !بلی اپنے بیمار بچے کو اسپتال لے آئی