بابر ازم

ٹی20رینکنگ میں ٹاپ پوزیشن پھربابراعظم کوگلے لگانے کیلیے تیار, جب کہ پاکستانی کپتان ایرون فنچ کو پیچھے چھوڑتے ہوئے دوسرے نمبر پر پہنچ گئے۔ان فارم پاکستانی کپتان بابراعظم نے ون ڈے رینکنگ میں ٹاپ پوزیشن سے بھارتی ویرات کوہلی کو بیدخل کر دیا تھا، اب تازہ ترین ٹی 20 رینکنگ میں وہ آسٹریلوی کپتان ایرون فنچ کو دوسرے نمبر سے محروم کرنے میں کامیاب رہے
جنوبی افریقہ سے تیسرے ٹی 20 میں 122 رنز کی عمدہ اننگز کی بدولت بابر کو 47 ریٹنگ پوائنٹ حاصل ہوئے، اب ان کا ٹاپ پر موجود انگلینڈ کے ڈیوڈ مالان سے 48 پوائنٹس کا فاصلہ رہ گیا ہے، زمبابوے کے خلاف پہلے میچ میں تو وہ بڑی اننگز نہ کھیل، البتہ3 ٹی 20 میچز کی سیریز کے بقیہ میچز میں عمدہ پرفارمنس سے بابر ایک بار پھررینکنگ میں ٹاپ پوزیشن حاصل کرسکتے ہیں جو گزشتہ برس نومبر تک ان کے قبضے میں تھی۔تیسرے میچ میں ناقابل شکست 73 رنز بنانے والے محمد رضوان نے 8 درجے ترقی سے کیریئر بیسٹ 15 ویں پوزیشن سنبھال لی۔ فخر زمان کا بھی ون ڈے کے بعد ٹی 20 رینکنگ میں بھی ترقی کا سفر جاری ہے، 17 درجے بہتری سے وہ اب 33 ویں نمبر پر پہنچ گئے ہیں۔لیفٹ آرم فاسٹ بولر شاہین شاہ آفریدی نے کیریئر بیسٹ 11 ویں پوزیشن سنبھال لی، فہیم اشرف 12 درجے ترقی سے 16 ویں نمبر پر آگئے، محمد نواز کو 4 درجے ترقی نے 24 ویں درجے پر پہنچا دیا، حارث رؤف 43 درجے ترقی پاتے ہوئے بولرز رینکنگ میں 38 ویں نمبر پر پہنچ گئے ہیں۔

KHI PAK VS ZIMBABWE MATCH

پاکستان اورزمبابوے کےدرمیان ٹی ٹوئنٹی سیریز کا پہلا ٹاکرا،،میدان کل ہرارے میں سجے گا،، قومی اسکواڈکی تیاریاں بھرپور اندازمیں جاری ہیں،،شاہین جیت کے لیے پرعزم شاہین زمبابوے میں بھی اونچی اڑان بھرنے کو تیار،،بابر اعظم،فخرزمان اورمحمد رضوان پھر سے کریں گے مار دھاڑ گرین شرٹس آج دوسرے دن بھی پریکٹس تیاریوں کو دیں گے فائنل ٹچ۔اس سے قبل قومی ٹیم کو زمبابوے پر سبقت حاصل ہے،،،کھیلے گے 14 میچز سب میں ہوئے فتح سے ہمکنار میزبان ٹیم اپنے ملک میں بھی نہیں کر سکی شاہینوں کو شکست سے دوچار. کپتان بابر اعظم پرامید،، یہ سیریز بھی کریں گے اپنے نام ۔آج ہوگی خوب پریکٹس ،،اور کل ہوگا میچ میں مار دھاڑ کا مقابلہ میچ پاکستانی وقت کے مطابق دن دو بجے شروع ہو گا

EUROPE FOOTBALL

یورپی فٹبال کی یکجہتی میں دراڑ ، 12 طاقتورترین کلبز نے باغی سپر لیگ کے انعقاد کا اعلان کردیا، ایونٹ کو یوئیفا کی منظوری حاصل نہیں، ای ایس ایل کے ابتدائی ایڈیشن کا انعقاد جلد متوقع۔سب سے طاقتور 12 یورپیئن کلبز نے گذشتہ روز یورپیئن سپر لیگ کے انعقاد کا اعلان کردیا،اس ایونٹ کو یوئیفا کی منظوری حاصل نہیں،اسے بڑے کلبز کی لالچ قرار دیا جا رہا ہے۔ای ایس ایل کے 12 فاؤنڈنگ ممبرز میں 6 پریمیئر لیگ ٹیمیں لیورپول، مانچسٹر یونائیٹڈ، آرسنل، چیلسی، مانچسٹر سٹی، ٹوٹنہم،اسپینش سائیڈز ریئل میڈرڈ، بارسلونا،ا یٹلیٹکو میڈرڈ کے ساتھ یووینٹس، انٹرمیلان اور اے سی میلان شامل ہیں۔ای ایس ایل کاکہنا ہے کہ فاؤنڈنگ کلبز ہفتے کے وسط میں کھیلے جانے بوالے ٹورنامنٹ پر متفق ہیں، اس کے ساتھ وہ اپنی متعلقہ نیشنل لیگز میں بھی حصہ لیتے رہیں گے،ای ایس ایل کے ابتدائی ایڈیشن کا انعقاد جلد ہوگا،اس میں 3 مزید فاؤنڈنگ کلب شامل کیے جائیں گے جبکہ باقی5کا فیصلہ کوالیفائنگ مرحلے میں ہوگا۔فاؤنڈنگ کلبز کو انفرااسٹرکچر کی بہتری اورکوویڈ اثرات سے نمٹنے کیلیے 3.5 بلین یورو دیے جائیں گے، ہر سیزن میں یہ 15 کلبز براہ راست ایونٹ میں جگہ پائیں گے،دوسری جانب ایس ایل کلبزکو لالچی قرار دیا جا رہا ہے۔یوئیفا اور3 ممالک کی نیشنل فٹبال باڈیز نے خبردار کیاکہ ان کلبز کے ڈومیسٹک اور چیمپئنز لیگ میں حصہ لینے پر پابندی عائد کی جا سکتی ہے، یوئیفا نے دھمکی دی کہ اس باغی لیگ میں حصہ لینے والے فٹبالرز اپنے ممالک کی انٹرنیشنل سطح پر نمائندگی نہیں کرپائیں گے، مشترکہ بیان میں کہا گیا کہ ہم اس باغی لیگ کا راستہ روکنے کیلیے متحد ہیں۔برطانوی وزیراعظم بورس جونسن نے کلبز سے کہا کہ وہ مزید کوئی قدم اٹھانے سے پہلے شائقین اور فٹبال برادری کو جواب دیں۔ادھر فیفا نے سپرلیگ پلان کو مسترد کرتے ہوئے تمام فریقین سے ٹھنڈے دماغ سے کھیل کے مفاد میں فیصلہ کرنے پر زور دیا ہے۔باغی سپر لیگ نے یورپی فٹبال کی یکجہتی میں دراڑ ڈال دی 12 طاقتورترین کلبز نے باغی سپر لیگ کے انعقاد کا اعلان کردیا

Pakistan v South Africa

ون ڈے کے بعد ٹی ٹوئنٹی سیریز بھی پاکستان کے نام۔ چوتھے ٹی ٹوئنٹی میچ میں پاکستان نے جنوبی افریقہ کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد تین وکٹوں سے شکست دے دی ۔ فخر زمان کی جارحانہ نصف سنچری،حسن علی اور فہیم اشرف کی تین تین وکٹیں۔ بابر اعظم پلیئر آف دی سیریز اورفہیم اشرف میں آف دی میچ کا ایوارڈ لے اڑے ون ڈے کے بعد ٹی ٹوئنٹی سیریز بھی شاہینوں کے نام ۔چوتھے ٹی ٹوئنٹی میچ میں سنسنی خیز مقابلے کے بعد پاکستان نے جنوبی افریقہ کو سات وکٹوں سے شکست دے دی۔۔سنچورین میں کھیلے گئے سیریز کے آخری میچ میں میزبان ٹیم نے پہلی میں اننگ میں ایک سو چوالیس رنز بنائے اور پاکستان کو جیت کے لئے ایک سو پینتالیس رنز کا ہدف دیا اسپیس جنوبی افریقی بلے باز جینمن ملان اور وین ڈر ڈوسن نے 57 رنز کی شراکت قائم کی ۔۔ ون ڈر ڈوسن نے شاندار 52 رنز بنائے ۔۔ حسن علی اور فہیم اشرف نے 3،3 جبکہ حارث رؤف نے دو وکٹیں حاصل کیں۔اسپیس پاکستان نے اننگز کا آغاز ناکامی سے کیا ۔ دوسری ہی گیند پر محمد رضوان بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹ گئے ۔ اس کے بعد فخر زمان اور بابر اعظم نے عمدہ شراکت سے ابتدائی نقصان کا ازالہ کردیا۔۔دونوں نے 91 رنز کی شراکت قائم کر کے پاکستان کی پوزیشن مستحکم بنائی، فخر زمان 60 رنز کی اننگز کھیلنے کے بعد پویلین لوٹے۔ بابراعظم 24 رنز بناسکے۔اسپیس پاکستان کو 10 اوورز میں فتح کے لیے 47 رنز درکار تھے۔اس موقع پر حفیظ 10، حیدر علی 3، آصف علی 5 اور فہیم 7 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہوئے۔ لیکن محمد نواز ڈٹ گئے اور اختتامی لمحات میں دو چھکے لگا کر پاکستان کو ایک گیند قبل ہی فتح سے ہمکنار کرا دیا

PAK VS SOUTH AFRICA

شکست کی تھپکی سے گرین شرٹس کو خوابِ غفلت سے جاگنے کا پیغام مل گیا، پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان تیسرا ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل آج سنچورین میں کھیلا جارہا ہےپاکستان نے مڈل آرڈر کی ناقص کارکردگی کے باوجود جنوبی افریقہ کیخلاف ون ڈے سیریز 2-1 سے اپنے نام کی،پھر پہلے ٹی ٹوئنٹی میں بمشکل ایک گیند قبل ہدف حاصل کیا، اس میچ میں بولرز اسٹار کرکٹرز سے محروم میزبان بی ٹیم کے بیٹسمینوں کو بڑا مجموعہ حاصل کرنے سے نہ روک پائے،خاص طور پر پیس بیٹری جدوجہد کرتی نظر آئی، آخری 5اوورز میں قدرے بہتر بولنگ نہ ہوتی تو پروٹیز 200سے زائد کا ہدف دینے میں کامیاب ہوجاتے۔بیٹنگ میں بھی ڈراپ کیچ سے موقع پانے والے محمد رضوان نے ایک اینڈ سنبھالے رکھا، مشکل صورتحال میں فہیم اشرف نے کارآمد اننگز کھیلی اور گرین شرٹس ناکامی سے بال بال بچے، ون ڈے سیریز اور پہلے ٹی ٹوئنٹی میں سامنے آنے والی خامیاں دوسرے ٹی ٹوئنٹی میں کھل کر سامنے آگئیں،طویل بیٹنگ لائن میں سے کسی نے جدید کرکٹ کے تقاضوں سے ہم آہنگ اننگز نہیں کھیلی، محمد حفیظ نے اچھی فارم کی جھلک دکھائی لیکن جلد آؤٹ ہوگئے۔بابر اعظم نے سست روی سے کھیلتے ہوئے ففٹی بنائی اور جب تیزی سے رنز بنانے کی سخت ضرورت تھی تو وکٹ گنوا بیٹھے، تیسرا ٹی ٹوئنٹی بدھ کو سنچورین میں کھیلا جائے گا،الرجی کی وجہ سے فخرزمان کی ٹانگ میں دانا نکل آیا تھا، اس وجہ سے دوسرے میچ میں شرجیل خان کو میدان میں اتارا گیا لیکن یہ تجربہ کامیاب نہیں رہا، اوپنر نے صرف 8رنز بنائے اور ایک ممکنہ کیچ پر غفلت کا مظاہرہ کرنے کے ساتھ فیلڈنگ میں مشکلات کا شکار نظر آئے۔ذرائع کے مطابق فخرزمان تیزی سے روبصحت اور انھیں پلیئنگ الیون کا حصہ بنائے جانے کا امکان ہے،محمد رضوان، بابر اعظم اور محمد حفیظ کو اپنے بیٹنگ پلان پر ازسر نو غور کرتے ہوئے بڑی اننگز کھیلنا ہوں گی،ابھی تک اپنی صلاحیتوں کا مظاہرہ نہ کرپانے والے حیدر علی دباؤ میں ہوں گے۔متبادل کے طور پر دانش عزیز اور آصف علی موجود ہیں مگر دونوں ون ڈے سیریز میں ناکام ہونے کے بعد اعتماد کی کمی کا شکار ہیں،آخری ون ڈے کھیلنے والے سرفراز احمد کا نام بھی زیر غور آئے گا۔عام طور پر پاکستان ٹیم کیلیے جنوبی افریقی کنڈیشنز میں میزبان برق رفتار بولرز کا سامنا مشکل ہوتا رہا ہے مگر حیران کن طور پراس بار جارج لینڈے جیسا نیا اسپنر اور لیزاڈ ولیمز جیسا نوآموزمیڈیم پیسر ہی پریشان کرنے لگا، پہلے میچ میں اچھی بولنگ کے بعد دوسرے میں قطعی متاثر نہ کرپانے والے اسپنر محمد نواز فارم کے متلاشی ہوں گے۔عثمان قادر کو وکٹیں اڑانے کے ساتھ رنز بھی روکنا ہیں، پیس بیٹری کی کارکردگی بھی پاکستان کیلیے باعث تشویش ہے، شاہین شاہ آفریدی پر تھکاؤٹ کے آثار نمایاں ہیں،حارث رؤف کی جگہ سنبھالنے والے محمد حسنین بھی میزبان بیٹسمینوں کو رنز بنانے سے روکنے میں ناکام رہے،ان حالات میں پاکستان سرپرائز پیکیج کے طور ارشداقبال یا وسیم جونیئر میں سے کسی ایک کو ڈیبیو کا موقع فراہم کرسکتا ہے۔دوسری جانب جنوبی افریقہ کو ان فارم ایڈن مارکرم کی خدمات حاصل ہیں، اوپنر نے دونوں میچز میں ففٹیز اسکور کیں، جنیمن مالان کا شمار بھی خطرناک بیٹسمینوں میں ہوتا ہے،کپتان ہینری کلاسن وکٹ کیپنگ کے ساتھ بہترین اسٹرائیک ریٹ سے رنز بنانے کی صلاحیت رکھتے ہیں،جارج لینڈے بال کے ساتھ بیٹ سے بھی میچ کا پانسہ پلٹ سکتے ہیں،ویہان لوبے اور پیٹ ون بلجوئیں فارم کے متلاشی رہے ہیں،ان کی جگہ کائیل ویرین اور اگر فٹ ہوئے تو ریسی ون ڈر ڈوسین کو شامل کرنے پر غور کیا جائے گا۔
سیساندا مگالا گذشتہ میچ کے پہلے اوور کے بعد ردھم میں آگئے تھے، ان کا ساتھ دینے کیلیے پیسرز لیزاڈ ولیمز، اینڈل فیلکوایو اور بیورن ہینڈرکس بھی موجود ہوں گے،اسپنر جارج لینڈے اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا چکے،دوسرے سلو بولر تبریز شمسی سیٹ بیٹسمینوں کو آؤٹ کرنے کی شہرت رکھتے ہیں۔سپورٹنگ پچ پر بیٹسمینوں اور بولرز کیلیے یکساں مواقع موجود ہوں گے،پاکستان نے رواں سیریز کے دونوں ون ڈے میچز سنچورین میں ہی جیتے تھے،اس وجہ سے تھوڑی نفسیاتی برتری حاصل ہوگی، مطلع جزوی طور پر ابر آلود مگر بارش کی مداخلت کا امکان نہیں ہے۔شکست کی تھپکی، گرین شرٹس کو خوابِ غفلت سے جاگنے کا پیغام مل گیا
پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان تیسرا ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل آج سنچورین میں کھیلا جارہا ہے

New Zealand bans entry of travelers

نیوزی لینڈ نے کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد تیزی سے اضافہ کے بعد بھارت سے آنے والے مسافروں کے ملک میں داخلے پر دو ہفتوں کیلئے پابندی لگا دی ۔غیر ملکی میڈیا رپوٹس کے مطابق یہ اقدام ایسے وقت سامنے آیا ہے جب نیوزی لینڈ کی سرحد پر کورونا وائرس کے تیئس کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جن میں سے سترا کا تعلق بھارت سے تھا۔ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جیسنڈا آرڈن نے کا کہنا ہے کہ بھارت سے آنے والے مسافروں کی نیوزی لینڈ میں داخلے پر عارضی پابندی لگادی گئی ہے۔ پابندی کا اطلاق گیارہ سے اٹھائیس اپریل تک ہوگا نیوزی لینڈ میں کورونا بے قابو بھارتی مسافروں کے ملک میں داخلے پر 2 ہفتوں کیلئے پابندی پابندی کا اطلاق 11 سے 28 اپریل تک ہوگا

SHAHID AFRIDI

قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی نے جنوبی افریقا کے کرکٹ بورڈ کو تنقید کا نشانہ بناڈالا۔ٹوئٹر پر جاری بیان میں شاہد آفریدی نے جنوبی افریقا بورڈ کی طرف سےکھلاڑیوں کو آئی پی ایل کھیلنےکی اجازت دینے پر اعتراض اٹھایا۔شاہد آفریدی نے کہا کہ سیریز کے دوران کھلاڑیوں کو آئی پی ایل کھیلنےکے اجازت دینا حیران کن ہے، یہ افسوسناک امرہے کہ ٹی ٹوئنٹی لیگز انٹرنیشنل کرکٹ پر اثر انداز ہو رہی ہیں

FAKHAR AUR IMAM

ون ڈے کرکٹ میں فخرزمان اور امام الحق کامیاب ترین پاکستانی اوپننگ جوڑی بن گئے، دونوں نے5 مرتبہ یہ سنگ میل عبور کیا
ون ڈے کرکٹ میں فخرزمان اور امام الحق کامیاب ترین پاکستانی اوپننگ جوڑی بن گئے جب کہ دونوں نے 5سنچری شراکتوں کا ریکارڈ قائم کردیا۔پاکستانی اوپنرز نے جنوبی افریقہ سے سیریز کے تیسرے ون ڈے میں نیا ریکارڈ قائم کردیا،امام الحق اور فخر زمان سب سے زیادہ سنچری شراکتیں قائم کرنے والی پاکستانی جوڑی بن گئے، دونوں نے5 مرتبہ یہ سنگ میل عبور کیا۔
اس سے قبل یاسرحمید و عمران فرحت اور ناصرجمشید و محمد حفیظ ون ڈے میچز میں 4، 4 سنچری پارٹنرشپ قائم کرنے والے اوپننگ پیئرز ہیں۔ فخرزمان نے ابتدائی50اننگز میں 2234رنز بنانے والے ظہیر عباس کو پیچھے چھوڑ دیا، ان کے رنز اب 2261ہوچکے، بابر اعظم نے 50اننگز میں 2129رنز بنائے تھے، عالمی ریکارڈ ہاشم آملہ کے پاس ہے، انھوں نے 50اننگز میں 2486رنز اسکور کرلیے تھے۔ فخرزمان نے جنوبی افریقہ کیخلاف 3ون ڈے میچز کی سیریز میں سب سے زیادہ رنز بنانے کا کارنامہ بھی سرانجام دیا ہے،انھوں نے مجموعی طور پر حالیہ سیریز میں 302رنز بنائے جس میں 2 سنچریاں شامل ہیں۔
اس سے قبل سابق آسٹریلوی کپتان رکی پونٹنگ نے پروٹیز کیخلاف 3میچز میں 233رنز بنائے تھے،عام طور کپتان بننے کے بعد کئی بیٹسمینوں کی کارکردگی میں زوال آتا ہے مگر بابر اعظم نے قیادت سنبھالنے کے بعد 89.80کی اوسط سے رنز بنائے ہیں
فخرزمان اور امام الحق کامیاب ترین پاکستانی اوپننگ جوڑی بن گئے فخر اور امام نے 5 سنچری شراکتوں کا ریکارڈ بنا دیا

WASEEM AKRAM

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان وسیم اکرم نے کہا ہے کہ فخر زمان نے دوسرے ایک روزہ میچ میں شاندار اننگز کھیلی، جنوبی افریقہ کی مشکل کنڈیشنز میں ٹاپ کلاس ٹیم کے خلاف عمدہ بیٹنگ بھی کی قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور سوئنگ کے سلطان وسیم اکرم نے کہا ہے کہ فخر زمان نے دوسرے ایک روزہ میچ میں شاندار اننگز کھیلی اور جنوبی افریقہ کی مشکل کنڈیشنز میں ٹاپ کلاس ٹیم کے خلاف عمدہ بیٹنگ کی۔وسیم اکرم نے کہا کہ فخر زمان کے رن آؤٹ کے بارے میں بہت باتیں ہو رہی ہیں، لیکن گریٹ جاوید میانداد نے اس رن آؤٹ پر بہت زبردست جواب دیا ہے۔انہوں نے بتایا کہ جاوید میانداد نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ بحیثیت بیٹسمین میری پہلی ذمہ داری ہے پہلے کریز پر پہنچوں بعد میں ادھر ادھر دیکھوں، جبکہ فخر زمان نے بھی اس بات کو تسلیم کیا ہے۔وسیم اکرم نے کہا کہ میرے کرکٹ ایکسپرٹ بھائیو میری ایک بات مان لو، یہ کیسی باتیں کرتے ہو کہ میں سچ بولوں گا۔انہوں نے کہا کہ ہمیں آپ کا سچ نہیں چاہئیے ہمیں حکمت عملی مائنڈ سیٹ اور پلاننگ چاہیے۔وسیم نے کورونا وائرس کی موجودہ صورتحال سے متعلق بات کرتے ہوئے کہا کہ کوویڈ کی تیسری لہر میں اپنا اور اپنی فیملی کا خیال رکھیں احتیاط کریں۔فخر نے مشکل کنڈیشنز میں ٹاپ کلاس ٹیم کیخلاف عمدہ بیٹنگ کی، وسیم اکرم
فخر زمان کے رن آؤٹ کے بارے میں بہت باتیں ہو رہی ہیں, وسیم اکرم

CRICKET

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ بولر عاقب جاوید نے سابق کپتان سرفراز احمد کو پلئینگ الیون میں شامل کرنے کے لیے آواز اٹھا دی۔عاقب جاوید کا کہنا ہے کہ سمجھ سے بالا ہے سرفراز احمد کو چھٹے نمبر پر کیوں کھلایا نہیں جا رہا، آصف علی اور افتخار احمد کی نسبت سرفراز احمد بہتر چوائس ہیں۔سابق فاسٹ بولر نے کہا کہ فخر زمان کو ٹی ٹوئنٹی اسکواڈ کا حصہ بنانا چاہیے، فخز زمان کے لئے سب سے بہتر فارمیٹ ٹی ٹوئنٹی ہے۔عاقب جاوید نے کہا کہ پاکستان ٹیم کے پاس سیریز جیتنے کا اچھا موقع ہے، پہلے دونوں میچز میں پاکستان نے بہترین پرفارمنس دی، جنوبی افریقہ کی کنڈیشنز،دیکھتے ہوئے پاکستان نے اچھی کرکٹ کھیلی۔ سابق ٹیسٹ کرکٹر نے کہا کہ فخر زمان نے جیسی اننگ کھیلی، کرکٹ میں کم دیکھنے کو ملتی ہے، جنوبی افریقہ کے اہم کھلاڑیوں کی عدم موجودگی میں سیریز جیتنے کا بہترین موقع ہے، آصف اور دانش کے ناکام ہونے کے بعد فہیم اشرف کو مڈل آرڈر میں کھلانا چاہیےعاقب جاوید نے کہا کہ پاکستان ٹیم کا نوجوان بالنگ اٹیک ابھی سیکھنے کے عمل سے گزر رہا ہے، قومی ٹیم کے فاسٹ بالرز باصلاحیت ہیں لیکن کنٹرول کی کمی دکھائی دی،فہیم اشرف نے جنوبی افریقہ میں سب سے بہتر باولنگ کی۔عاقب جاوید نے کہا کہ بولنگ کوچ کو آف سیزن میں بولرز کے ساتھ کام کرنا چاہیے، غیر ملکی کوچز سیریز کے بعد اپنے گھروں کو لوٹ جاتے ہیں۔عاقب جاوید نے سرفراز احمد کو پلئینگ الیون میں شامل کرنے کے لیے آواز اٹھا دی